rehman malik talk about mumbai attack 8

سابق وزیر داخلہ و سابق وزیرِداخلہ سینیٹر رحمان ملک نے ممبئی حملوں کا ذمہ دار بھارت کو قراردے دیا

سابق وزیر داخلہ و سابق وزیرِداخلہ سینیٹر رحمان ملک نے ممبئی حملوں کا ذمہ دار بھارت کو قراردے دیا
نواز شریف ممبئی حملوں پر اپنا بیان واپس لیں: سابق وزیر داخلہ رحمن ملک

سابق وزیر داخلہ و پیپلز پارٹی سینیر رہنماء سینیٹر رحمان ملک نےبھارت کو ممبئی حملوں کا  ذمہ دار ٹھرایا ہے۔ انہوں نے کہا  کہ ان حملوں کی منصوبہ بندی مقبوغہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر سےدنیا کی توجہ ہٹانے کیلئے کی گئی تھی، اپنے بیان میں انہوں نے کہا ہےکہ ریاست پاکستان کا ان  حملوں میں کوئی کردار نہیں اور ہم نے ان حملوں کی بھرپور مذمت کی تھی اور کر رہے ہیں۔

سابق وزیر اعظم  نواز شریف کےان حملوں کے حوالے سے بیان پر سینیٹر رحمان ملک نے کہا کہ ایسا بیان حافظ سعید کیخلاف اقوام متحدہ کی قرارداد کی حمایت کے مترادف ہے اور انتہائی غیر ذمہ دارانہ و بچگانہ ہے جو ملک کو مشکلات میں ڈال سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حافظ سعید ان حملون میں ملوث نہیں پایا گیا تھا۔

سینیٹر رحمان ملک نے سابق وزیر اعظم نواز شریف سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے اس بیان کو واپس لیں کیونکہ انکے اس بیان سے پاکستان کے بارے میں غلط تا ثر پیدا ہوا ہے، انہوں نے نواز شریف کو مشورہ دیا کہ وہ سٹیٹ ایکٹر اور   نان سٹیٹ ایکٹر کے بارے میں بریفنگ لیں تاکہ اسکو دونوں میں فرق واضح ہو۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف کا بیان پیپلز پارٹی کے نقطہ نظر سےمختلف ہے۔

سابق وزیر داخلہ رحمان ملک نے کہا کہ یہ معاملہ نیشنل ڈیفنس کونسل کے اجلاس میں زیر بحث آچکا ہے جس کی صدارت اس وقت کے وزیراعظم نے کی جس میں فوج کے تینوں سروسز کے سربراہوں اور کابینہ کے دیگر ارکان نے بھی شرکت کی تھی۔ میں نے اس وقت اجلاس میں کہا تھا کہ ”را“ نے ہمارے نان سٹیٹ ایکٹرز کو استعمال کیا۔ حملوں سے بہت پہلے ”را“ نے ممبئی میں مذکورہ ہوٹل کے نقشے حاصل کئے تھے۔

”را“ نے پاکستان سے نان سٹیٹ ایکٹرز بھرتی کرنے کیلئے سہولت فراہم کی، یہی وجہ ہے کہ بھارت نے پاکستان کی طرف سے کئی مرتبہ درخواست کے باوجود پاکستانی تفتیش کاروں کو ممبئی ہوٹل تک رسائی نہیں دی۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ انصاری برادرز کو پاکستان کے حوالے کیا جائے۔ سمجھوتہ ایکسپریس حملوں میں ملوث ”را“ اور آر ایس ایس کو سپریم کورٹ کے سامنے ظاہر کرنے والے ایماندار ڈی آئی جی کارکرے کو قتل کردیا گیا تھا۔

انہوں نے سوال کیا کہ انصاری برادر نے ”را“ کے ایما پر ممبئی حملوں میں بڑا سہولت کار کردار ادا کیا۔ ان پر مقدمہ کیوں نہیں چلایا گیا۔ ڈیوڈ ہیڈلے کی بھی ”را“ نے مکمل حمایت کی تھی۔ ممبئی حملوں میں ”را“ ملوث ہے اور پاکستان کوپھنسانے کے لئے چند مغربی ممالک نے بھی حمایت کی تھی۔

اپنی رائے دیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں