63

تھرپارکر :ضلع قتل ہونے والے دو تاجر بھائیوں دلیپ کمار اور چندر کمار مھیشوری کے قاتلوں کی عدم گرفتاری شھر مکمل بند

رپورٹ:مریم صدیقہ انقلاب نیوز مٹھی
تھرپارکر کے ضلع ھیڈکواٹر مٹھی میں گذشتہ روز قتل ہونے والے دو تاجر بھائیوں دلیپ کمار اور چندر کمار مھیشوری کے قاتلوں کی عدم گرفتاری خلاف مٹھی شھر مکمل بند ۔تاجروں۔شھریوں اور سیاسی سماجی رھنمائوں سمیت منتخب نمائندوں کا کشمیر چوک پر دھرنا۔پیپلزپارٹی سندھ کے اطلاعات سیکریٹری سینیٹر عاجز دھامرہ اور ڈی آء جی میرپورخاص بھی تعزیت کے لئے پہنچے۔مٹھی میں گذشتہ روز ڈکیتی کے دوراں مزاحمت پر قتل ہونے والے دو  تاجر بھائیوں دلیپ کمار اورچندر مھیشوری کے قاتلوں کی  دو روز گذر جانے باوجود بھی قاتلوں کا سراغ نہ لگانے پرمٹھی کے تاجروں نے شھر کی تمام مارکیٹیں بند کرکے مٹھی کے  کشمیر چوک پر دھرنا  دیا ۔مٹھی کے تاجروں کا کہنا تھا کہ ابھی تک ملزمان کی گرفتاری کے لئے کوئی پیش رفت نہیں ہوسکی ہے اور پولیس کی عدم توجے سے ہی ملزماں دو شھریوں کو کھلی عام فائرنگ سے قتل کرکے فرار ہوگئے اور ابھی تک پولیس نے خاص اقدامات نہیں لیئے۔قاتلون کی گرفتاری اور پرامن علاقے مین ایسی واردات کے ملزمان کو کیفرکردار تک پہنچایا جائے۔مظاھریں نے ایس ایس پی تھرپارکر خلاف نعرے بازی کی ۔دھرنے میں مختلف سیاسی ۔سماجی رھنما منتخب نمائندےپی ٹی اے کا ایم این اے لال مالہی ۔ایم۔پی۔اے ڈاکٹر مھیش کمار ملانی۔دوست علی راھموں۔پ پ منارٹی ونگ صوبائی صدر لال چند اکرانی۔وسند تھری۔گھنشام مالہی۔کاشف بجیر۔نندلال مالہی۔وکلاء اور قومپرست جماعتوں کے عھدیداراں بھی شامل ہوئے۔8 گھنٹے بعد ایک بار بھر ڈاکٹر مھیش کمار ملانی کی یقین دھیانی بعد دھرنا ختم کردیا گیا۔گذشتہ روزبھی  ایم پی اے ڈاکٹر مھیش کمارملانی نے کل تاجروں ے قاتلوں کو 24 گھنٹون میں گرفتار کرنے کا یقین دلایا تھا مٹھی پولیس نے ملزمان سے رابطے کے شبے میں قریب گلی کے دو چوکیداروں رائچند میگھواڑ اور بیٹے لونو مل کو حراست میں لے لیا ہے۔ادھر پیپلزپارٹی کے صوبائی اطلاعات سیکریٹری سینیٹر عاجز دھامرہ بھی مقامی منتخب نمائندوں کے ھمراھ تعزیت کے لئے ورثاء کے پاس پہنچے اور ملزماں کی جلد گرفتاری کا یقیں دلایا ۔اس موقعے پر انہون نے میڈیا سے بات کرتے کہاکہ پیپلزپارٹی چیئرمین بلاول بھٹو کی ھدایت پر ورثاء کے پاس پہنچا ہوں۔تھر کی تاریخ کا پہلہ دردناک واقعہ ہے۔سندھ حکومت کے لئے یہ کیس اھم ہے کہ قاتل جرم کرنے والے ہو یا سازشی ان کو پکڑ میں لایا جائے انہوں نے مزید کہا کہ تھر کے لوگ پرامن ہیں ان کا تحفط کرنا ھمارا فرض ہیں ۔ڈی آء جی میرپورخاص مظھر نواز شیخ اور ایس ایس پی عمرکوٹ بھی مٹھی پہنچے ۔جاء واردات کامعائنہ کیا اور ایس ایس پی تھرپارکر آفس میں اجلاس بھی کیا۔ڈی آء جی نے ورثاء کے پاس جاکر تعزیت بھی کی ۔اس موقعے پر انہوں نے میڈیا سے بات کرتے کہا کہ سندھ  پولیس جلد ہی قاتلوں تک پہنچ جائے گی۔بہت سے ثبوت اکھٹے کر لیے ہیں۔قاتلوں کو کیفرکردار تک پہنچائے گے۔کیس کی تفتیش کے لئے مختلف اضلاع کے 10 پولیس افسراں پر مشتمل چار ٹیمیں تشکیل دی ہیں۔جلد ہی قاتلوں تک پہنچ جائیں۔ایسے جرم کی وارداتیں ہوتی رہتی ہیں  مگر تھر میں ایسا بڑا واقعہ پہلی بار ہوئا ہے۔اس واقعے کے ملزماں کو جلد ہی پکڑ لیا جائے گا۔تمام پولیس کی ٹیمیں کیس کے ھر حوالے سے تفتیش کررہے ہیں۔ادھر پولیس زرائع سے سی سی ٹی وی فوٹو میڈیا کو موصول ہوئی ہے جس میں دو موٹر سائیکل سوار دکھائے گئے ہیں جن پر شبہ ہے کہ وہ ہی ملزم ہیں۔مٹھی شھر کی مارکٹیں دن بھر مکمل بند رہی اور تاجروں نے اعلان کیا کہ کل آج بھی مارکٹیں بند کرکے احتجاج جاری رکھا جائے گا۔

اپنی رائے دیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں