care taker prime minister pakistan 62

نگران وزیر اعظم کے انتخاب کا معاملہ گھمبیر صورتحال اختیار کر گیا

نگران وزیر اعظم کے انتخاب کا معاملہ گھمبیر صورتحال اختیار کر گیا

انقلاب نیوز

اختیار اپوزیشن لیڈر کے حوالے کرنے والے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کو پیپلزپارٹی کے ناموں پر اعتراض ہو گیا،زرائع

نگران وزیراعظم کے معاملہ پر تحریک انصاف اور نون لیگ کا موقف ملنے لگا ہے

جسٹس ر تصدق حسین جیلانی اور سابق گورنر شمشاد اختر میں سے ایک کو نگران وزیراعظم بنانے کا قوی امکان ہے،زرائع

معاملہ وزیر اعظم اور اپوزیشن لیڈر کے درمیان طے نہ ہو سکا تو 8 رکنی پارلیمانی کمیٹی میں جائے گا

پارلیمانی کمیٹی 8 اراکین پر مشتمل ہو گی پارلیمانی کمیٹی میں حکومت کے 4 پیپلز پارٹی کے 2 ،تحریک انصاف اور ایم کیو ایم کا ایک ایک ممبر ہو گا

پارلیمانی کمیٹی اکثریتی بنیادوں پر فیصلہ کرے گی،زرائع

معاملہ پارلیمانی کمیٹی میں جانے پر نگران وزیراعظم نون لیگ اور تحریک انصاف کا متفقہ ہونے کاروشن امکان ہے،زرائع

تحریک انصاف کی پہلی تصدق حسین جیلانی اور دوسری ترجیح شمشاد اختر تیسری اشتیاق احمد خان

پیپلزپارٹی کی پہلی ترجیح زکاء اشرف اور دوسری ترجیح جلیل عباس جیلانی ہیں پیپلز پارٹی نے تیسرا نام سلیم عباس جیلانی کا دیدیا

معاملہ پارلیمانی کمیٹی میں جانے پر تحریک انصاف اور نون لیگ کا ایک دوسرے کی حمایت کا امکان ،ذرائع

کا دعوی نگران وزیر اعظم کے لئے زیر بحث شخصیات میں تین کزن بھی شامل ہیں جلیل عباس جیلانی،سلیم عباس جیلانی اور تصدق حسین جیلانی آپس میں کزن ہیں،زرائع

اپنی رائے دیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں